زبان: اردو

اگر عورت صحت مند اور حاملہ ہونے سے پہلے غذائیت سے بھرپور غذا لیتی رہی ہو توبچے کی پیدائش سے منسلک ماں اور اس کے بچے کو درپیش خطرات کو بڑی حد تک کم کیا جاسکتا ہے۔اپنے بچوں کی موزوں ذہنی نشوونماء کو یق

اگر عورت صحت مند اور حاملہ ہونے سے پہلے غذائیت سے بھرپور غذا لیتی رہی ہو توبچے کی پیدائش سے منسلک ماں اور اس کے بچے کو درپیش خطرات کو بڑی حد تک کم کیا جاسکتا ہے۔اپنے بچوں کی موزوں ذہنی نشوونماء کو یقینی بنانے کے لئے دوران حمل اور بچے کو اپنا دودھ پلانے کے دوران، تمام عورتوں کو زیادہ غذائیت سے بھرپور کھانا، خوراک کی اضافی مقدار،عام حالت کی نسبت زیادہ آرام، آئرن فولک ایسڈ یا غذائیت سے بھرپور اضافی خوراک کی ضرورت ہوتی ہے، چاہے وہ غذائیت سے بھرپور خوراک اور آیوڈین ملا نمک استعمال کررہی ہوں۔

نوجوان بالغ لڑکیوں، عورتوں،حاملہ عورتوں اور نئی ماؤں کو بہترین دستیاب خوراک کی ضرورت ہوتی ہے:دودھ، تازہ پھل اور سبزیاں، گوشت مچھلی،انڈے، غلہ، مڑ اور لوبیا۔یہ تمام غذائیں دوران حمل اور بچے کو اپنا دودھ پلانے کے دوران محفوظ ہوتی ہیں۔

اگر دوران حمل غذائیت سے بھرپور کھانا کھائیں، غذائیت سے بھرپور کھانے کی زیادہ مقدار استعمال کریں اور عام دنوں کی نسبت زیادہ آرام کریں تو وہ اپنے آپ کو زیادہ مضبوط محسوس کریں گی۔ آئرن، وٹامن ’اے‘ اور فولک ایسڈ سے بھرپور غذائیت والی خوراک میں گوشت، مچھلی، انڈے، سبز پتوں والی سبزیاں، اور نارنگی یا پیلے رنگ کے پھل اور سبزیاں شامل ہیں۔

بچے کی پیدائش کے بعدبھی عورتوں کو غذائیت سے بھرپور کھانے، کھانے کی زیادہ مقدار استعمال کرنے، اور آرام کرنے کی ضرورت ہوتی ہے۔ بچے کو اپنا دودھ پلانے والی ماؤں کو روزانہ تقریباً 500کیلوریز زیادہ استعمال کرنے کی ضرورت ہوتی ہے،جو ایک اضافی کھانے کے برابر ہے۔

قبل ازپیدائش وزٹس کے دوران، تربیت یافتہ کارکن صحت خون کی کمی کو روکنے یا اس کی علاج کرنے کے لئے آئرن-فولک ایسڈ یا غذائیت کی کمی کو پورا کرنے والی بہت سی ادویات اسے فراہم کر سکتی ہے۔ اگر ضرورت ہو توملیریا یا خون چوسنے والے کیڑوں (hookworm)کا علاج کیا جا سکتا ہے۔ اگر ضروری ہوتو کارکن صحت رات کے اندھے پن کے لئے حاملہ عورت کو اسکرین بھی کر سکتی ہے، عورت کے علاج کے لئے وٹامن ’اے‘ کی موزوں خوراک تشخیص کر سکتی ہے اور جنین کی صحت مندنشوونماء میں اپنا کردار ادا کرسکتی ہے۔

اگر حاملہ عورت یہ محسوس کرتی ہے کہ وہ خوراک کی کمی، ملیریا، یا خون چوسنے والے کیڑوں کی بیماری کا شکار ہے، تو اسے کسی تربیت یافتہ کارکن صحت یا ڈاکٹر سے مشورہ کرناچاہئیے۔

خاندان کے لوگوں کوآیوڈین ملانمک استعمال کرناچاہئیے۔ بچے کے ذہن کی صحت مندنشوونماء کے لئے حاملہ عورتوں اور کم عمر بچوں کی غذا میں آیوڈین ہونا خاص طور پر بہت ضروری ہے۔ گلہڑ،یعنی گردن کے سامنے والے حصے پر سوجن، اس بات کی واضح علامت ہے کہ اس کا جسم موزوں مقدار میں آیوڈین حاصل نہیں کر رہا۔ کم آیوڈین ملی غذاکااستعمال، خاص طور پر حمل کے ابتدائی مراحل اور ابتدائی بچپن میں، بہت نقصان دہ ہوتا ہے۔ وہ عورتیں جو اپنی غذا میں آیوڈین کی موزوں مقدار استعمال نہیں کرتیں ان کے ہاں پیدا ہونے والا شیر خوار بچہ کسی ذہنی یا جسمانی معذوری کا سبب بن سکتا ہے۔ آیوڈین کی شدید کمی جسمانی اور ذہنی نشوونماء کو روک دینے، مردہ بچے کی پیدائش،اسقاط حمل اور شیر خوار بچے کی موت کا سبب بن سکتی ہے۔

The Internet of Good Things