زبان: اردو

بچے کی پیدائش ماں اور اس کے بچے کے لئے بڑا کڑا (اہم) وقت ہوتا ہے۔ ہر حاملہ عورت کو بچے کی پیدائش کے دوران مدد کے لئے کسی ماہر، جیسا کہ مڈوائف، ڈاکڑ یا نرس کی موجودگی ضروری ہے، اور اگر کوئی پیچیدگی پی

بچے کی پیدائش ماں اور اس کے بچے کے لئے بڑا کڑا (اہم) وقت ہوتا ہے۔ ہر حاملہ عورت کو بچے کی پیدائش کے دوران مدد کے لئے کسی ماہر، جیسا کہ مڈوائف، ڈاکڑ یا نرس کی موجودگی ضروری ہے، اور اگر کوئی پیچیدگی پیدا ہو تو اسے لازمی طور پر بروقت خصوصی دیکھ بھال تک رسائی بھی درکار ہے۔

ہر حمل توجہ کا مستحق ہوتاہے کیوں کہ ہمیشہ ماں، بچے یا دونوں کے ساتھ کچھ نہ کچھ غلط ہونے کا اندیشہ رہتا ہے۔ اگر عورت یہ طے کر لیتی ہے کہ بچے کی پیدائش کسی ماہر فرد،جیسا کہ کوئی ڈاکٹر،نرس یا مڈ وائف کی موجودگی میں ہو، اور بچے کی پیدائش سے قبل دوران حمل کم از کم چار مرتبہ کسی تربیت یافتہ کارکن صحت یا ڈاکٹر کو وزٹ کر لیتی ہے، توبہت سے خطرات، امراض بلکہ موت سے بھی محفوظ رہا جا سکتا ہے۔

جب بچے کی پیدائش صحت کی سہولتوں سے اچھی طرح آراستہ کسی مرکز صحت یا اسپتال میں کسی ایسی ماہر دایہ یا مڈ وائف کی نگرانی میں ہو جو پیدائش کے فوری بعد 24تک ماں اور بچے کو بھی باقاعدہ چیک کر سکے، تو ماں یا بچے کو بیماری یا موت سے بچانے کے زیادہ امکانات ہوتے ہیں۔

جب حاملہ عورت بچے کی پیدائش کے لئے تیار ہو، تو اسے اپنی مرضی کی ساتھی کو اپنے ہمراہ رکھنے کی حوصلہ افزائی کرنی چاہئیے جو بچے کی پیدائش کے دوران اور اس کے بعد اسے مسلسل مدد فراہم کر سکے۔ خصوصاً جب وہ درد زہ کے مراحل سے گزر رہی ہو تو وہ اسے کھانے اور پینے میں، بچے کی پیدائش کے مختلف مراحل میں سانس لینے کے درست طریقوں کے استعمال،اور ضرورت پڑنے پر درد اورماہر دایہ یا مڈوائف کے مشورے سے بے آرامی سے نجات کے لئے کوئی بندوبست کر سکے۔

بچے کی پیدائش کے فوری بعد، ماہردایہ یا مڈوائف کو یہ کرنا ہوگا، کہ:

• درد زہ کا جائزہ لے اور اس میں کمی بیشی پر نظر رکھے اور خطرے کی ان علامات پر نظر رکھے جن میں فوری مدددرکار ہو گی • اگر خصوصی دیکھ بھال کی ضرورت ہے اور اگر کسی اسپتال یا زچہ بچہ مرکز منتقل کرنا ضروری ہے تو عورت اور اس کے گھر والوں کو ایسا کرنے کامشورہ دے • ہاتھ، آلات اور ڈلیوری کاعلاقہ صاف رکھتے اور مناسب مواقع پر دستانے استعمال کرتے ہوئے انفیکشن کے خطرے کو کم کرے • درد زہ کے پہلے مرحلے کے دوران عورت کوچلنے میں حوصلہ افزائی کرے اور بچے کی پیدائش کے لئے پوزیشن میں اس کی ترجیح کی حمایت کرے • درد زہ اور بچے کی پیدائش کے مختلف مراحل میں مدد دے • ناڑو کو موزوں وقت پر کاٹے اور اس کا خیال رکھے • بچے کی دیکھ بھال کرے اور پیدائش کے بعد اس کے جسم کر گرم رکھے • پیدائش کے فوری بعد بچے کو جِلد سے جِلد کے فوری رابطے کے لئے ماں کے سینے پر ڈالنے اور بچے کو اپنا دودھ پلانے کا آغاز کرنے میں ماں کی رہنمائی کرے • بعد از پیدائش ظاہر ہونے والی چیزوں (placenta)کو حفاظت سے باہر نکالے اور بچے کی پیدائش کے بعد ماں کا خیال رکھے • بچے کامعائنہ کرے اور اس کا وزن کرے اور اندھے پن اور انفیکشن کو روکنے کے لئے بچے کی آنکھوں میں تجویزکردہ دوائی کے قطرے ڈالے • نوزائیدہ بچے کی صحت کے مسائل کو حل کر اور اگر ضروری ہو، تو بچے اور ماں کو کسی موزوں اسپتال یا مرکز صحت کی طرف ریفر کرے۔

The Internet of Good Things